July 20, 2024

اردو

اردو

کلیسیا ایک جمہوری ادارہ کیوں نہیں ہے؟

کلیسیا ایک جمہوری ادارہ کیوں نہیں ہے؟ - یسوع مسیح کی عظیم قوت کا جلال - دوستانہ اصول

کلیسیا ایک جمہوری ادارہ کیوں نہیں ہے؟

جمہوریت اِس اصول پر چلتی ہے کہ ساری قوت لوگوں سے آتی ہے۔ البتہ کلیسیا میں ساری قوت یسوع مسیح سے آتی ہے۔ اِسی لئے کلیسیا درجہ بندی کے اصول پر بنی ہے۔ اِسی طرح یسوع مسیح نے بھی کلیسیا کو دوستانہ اصول دیے ہیں۔ کلیسیا میں درجہ بندی کا اصول اِس حقیقت پر مشتمل ہے کہ جب مقرر رہنما خُدا کے فضل سے کلیسیا کے لئے کُچھ کرتے یا اُنہیں کُچھ دیتے ہیں جو وہ خود نہیں کر سکتے کیونکہ مسیح ہی وہ اکیلی شخصیت ہیں جو کلیسیا میں کام کرتے ہیں، دوسرے الفاظ میں کہ جب وہ مسیح کی جگہ ساکرامینٹ کی رہنمائی کرتے ہیں اور اُن کے اختیار کے ساتھ سکھاتے ہیں۔

کلیسیا میں دوستانہ اصول اِس حقیقت پر مشتمل ہے کہ مسیح نے پورا ایمان اپنے بارہ شاِگردوں کو دیا، جن کے جانشین پوپ کے ساتھ اور پیٹرین منسٹری کی صدارت میں کلیسیا کی رہنمائی کرتے ہیں۔ اِس دوستانہ نقطہ نظر کے ذریعے کونسل کلیسیا کا ایک اہم حصہ ہے۔ یہاں تک کہ کلیسیا کی دوسری انتظامیہ، مجلسوں اور کونسل میں، رُوح کے مختلف تحفے ملتے ہیں اور دُنیا میں عالمی سطح پر کلیسیا پھلدار ہوسکتی ہے۔

خُداوند آپ سب کو اپنی تمام برکات سے نوازے اور آپ سب کو زندگی کی تمام مشکلات سے دور رکھے۔ آپ یوں ہی خُدا کے فضل سے اپنی زندگیوں میں ترقی کرتے جائیں اور یسوع مسیح کے احکام پر عمل کریں۔ یسوع مسیح کے جلالی اور بابرکت نام میں آمین!

Facebook
Twitter
LinkedIn

RELATED ARTICLES