April 23, 2024

English Spanish اردو

English Spanish اردو

کیا چرچ ایمان کے معاملے میں غلطی کر سکتا ہے؟

کیا چرچ ایمان کے معاملے میں غلطی کر سکتا ہے؟

یوحنا 14 باب 17 آیت: “کامل ایمان والا کبھی ایمان میں غلطی نہیں کر سکتا، کیونکہ یسوع نے اپنے شاگردوں سے وعدہ کیا ہے کہ وہ سچائی کی روح بھیجے گا اور اُنھیں سچائی میں رکھے گا”۔

جیسے کہ شاگرد اپنے پورے دل کے ساتھ یسوع مسیح پر یقین رکھتے تھے۔ جب ایک مسیحی زندگی کے راستے کے بارے میں پوچھتا ہے تو وہ چرچ پر مکمل طور پر انحصار کر سکتا ہے۔ چونکہ یسوع مسیح نے اپنے رسولوں کو مسیحی تعلیم دینے کی اجازت دی ہے۔ چرچ کو درس و تدریس کا اختیار ہے اور اس کو خاموش نہیں رہنا چاہئے۔ اگرچہ چرچ کے انفرادی ارکان غلطِی کر سکتے ہیں اور یہاں تک کہ سنجیدہ غلطی بھی کرتے ہیں۔ لیکن چرچ کی سچائی میں کبھی بھی غلطی نہیں آ سکتی۔ چرچ نے ان تمام سالوں میں سچ کو سنبھالا ہے اور اسے لے کر چلا ہے۔ ہم ایمان کے ذخیرے کے بارے میں بات کرتے ہیں، ایمان کا ایک ذخیرہ جسے محفوظ ہونا ہے۔ اگر یہ سچ عوامی طور پر متنازعہ یا مسخ ہوتا ہے تو کلیسیا کو دوبارہ وضاحت کرنے کے لئے کہا جاتا ہے۔

“وہ جو ہر جگہ اور ہر کوئی مانتا ہے”۔ (ایس ٹی – ونسینٹ آف لیرنس، ڈی۔ 450)۔

Facebook
Twitter
LinkedIn

RELATED ARTICLES